اسکرینز سے نجات دلانے والا چشمہ

ہماری زندگیوں میں بڑھتا ہوا اسکرین ٹائم ایک طرف تو ہمیں فطرت سے دور کر رہا ہے تو دوسری طرف ہمیں بے شمار طبی و نفسیاتی مسائل میں مبتلا کر رہا ہے، تاہم اب ایسا چشمہ بنا لیا گیا ہے جو اسکرینز سے تحفظ دے سکتا ہے۔ آئی آر ایل نامی یہ چشمے ایل سی ڈی اور ایل ای ڈی کی روشنیوں کو بلاک کردیتے ہیں جس کے بعد چلتا ہوا ٹی وی چشمہ لگانے والے کو بند نظر آتا ہے۔ یہ چشمے ہوریزونٹل پولرائزیشن کی تکنیک کے تحت کام کرتے ہیں جو زیادہ تر چمکتی ہوئیاسکرینز کو بند ظاہر کرتے ہیں۔ یہ انوکھا چشمہ سنہ 1988 میں پیش کی جانے والی ایک فلم ’دے لیو‘ سے متاثر ہو کر بنایا گیا ہے جس میں چشمہ لگانے کے بعد خفیہ پیغامات ظاہر ہوجاتے ہیں۔ یہ چشمہ او ایل ای ڈی اسکرینز کو بند نہیں کرسکتا یعنی انہیں لگانے کے بعد بھی کچھ قسم کے ڈیجیٹل بل بورڈز اور فون کی اسکرینز چلتی رہیں گی۔ اسے بنانے والے اسکاٹ بلیو اور ایون کیش کا کہنا ہے کہ انہیں بنانے کا مقصد اسکرینز پر گزارے جانے والے ٹائم میں کمی کرنے میں مدد دینا ہے۔

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.